JoomlaLock.com All4Share.net


جب فجر کی دو سنتیں ادا کر لے تو دائیں کروٹ پر لیٹ جا۔ جب فجر کی نماز پڑھ اور تشہد میں بیٹھ تو نبی پاک پر درود بھیج، عذاب قبر، عذاب نار، فتنہٴ دجال اورزندوں اور مُردوں کے فتنے سے اللہ کی پناہ مانگ۔اور ہاں کوشش کر کہ عبادات میں سے جو کچھ میں تجھے کرنے کا کہتا ہوں وہ مت چھوڑ؛ کیونکہ عبادات میں سے میں نے صرف وہی کچھ کرنے کا کہا ہے جس کے بارے میں مجھے خبر ہے کہ اس کے ترک کرنے میں علما کا اختلاف ہے، اور میں یہ بھی چاہتا ہوں کہ تو اس طرح مکمل عبادت کرے کہ جس میں کوئی اختلاف نہ ہو۔ اس وصیت اور اس جیسی دیگر وصایا میں میری یہی غرض ہے؛ لہذا جو کچھ میں نے تجھے وصیت کیا اس میں سے کچھ نہ چھوڑ۔

اسی طرح جب کسی سے محبت کر تو اسے بتا کہ تو اس سے محبت کرتا ہے؛ کیونکہ اس بتانے سے تو اس کی محبت کو بھی کھینچ لائے گا، اور وہ بھی بلا شک و شبہ تجھ سے محبت کرنے اور تجھے کچھ سمجھنے لگے گا۔

تجھے سنت متواترہ اور اللہ کی کتاب کو تھامنا چاہیے کیونکہ یہی بہترین ساتھی اور بہترین ہمنشین ہیں، کبھی صحابہ کرام کے درمیان ہونے والے تنازعات کی تفصیل میں مت پڑ بلکہ تمام اصحاب محمد سے محبت کر، ان میں سے کسی ایک کو بھی تنقید کا نشانہ نہیں بنایا جا سکتا؛ کیونکہ جس دین کو اللہ نے ہم پر نافذ کیا وہ دین ہم تک انہی سے پہنچا ہے، لہذا ان سے لیتے وقت انصاف کا دامن تھامے رکھ اور تہمت نہ لگا؛ کیونکہ وہ بہترین زمانے والے لوگ ہیں۔

ہم نے حضرت علی بن ابی طالب سے روایت کیا ، آپ نے فرمایا: مجھے رسو ل اللہ نے وصیت کرتے ہوئے فرمایا:

اے علی! جہالت سے بڑھ کر کوئی افلاس نہیں اور عقل سے عمدہ کوئی مال نہیں، خود پسندی سے بڑھ کر وحشت ناک تنہائی نہیں، مشاورت سے بڑھ کر کوئی امداد نہیں، یقین جیسا کوئی ایمان نہیں، کنارہ کشی جیسی کوئی پرہیز گاری نہیں، حسن کردار جیسا کوئی حسب نسب نہیں اور تفکر جیسی کوئی عبادت نہیں۔

حضرت علی علیہ السلام نے پوچھا: یا رسول اللہ! مجھے اللہ تعالی کے اس قول کے بارے میں بتائیے: ﴿پس حضرت آدم نے اپنے رب سے کچھ کلمات حاصل کیے،تو اس ذات نے انہیں معاف کیا﴾ (البقرة: 37) یہ کون سے کلمات تھے؟ نبی کریم نے فرمایا: اللہ تعالی نے حضرت آدم کو ہندوستان میں اور مائی حوا کو جدہ میں اتارا، سانپ کواصفہان اور ابلیس کو (بیسان) میں اتارا ۔ جنت میں مور اور سانپ سے زیادہ خوبصورت کوئی چیز نہ تھی اور وہاں سانپ کے بھی ویسے ہی پاؤں تھے جیسے اونٹ کے پیر ہوتے ہیں۔ لہذا جب ابلیس – اللہ کی اس پر لعنت ہو – اس کے اندر گھسا اور آدم کو دھوکا دیا اور بہکایا تو اللہ تعالی سانپ پر شدید غضب ناک ہوا اور اس کے پاؤں کاٹ کر پھینک دیئے اور فرمایا: میں نے تیرا رزق مٹی یا ریت میں رکھ دیا اور اب تو اپنے پیٹ کے بل ہی چلے گا اور جو تجھ پر رحم کرے گا اللہ اس پر رحم نہیں کرے گا۔ اور اللہ تعالی نے مور پر اپنے غصے کا اظہار یوں کیا کہ اس کے پاؤں بگاڑ دئیے؛ کیونکہ یہ مور ہی شیطان کو اس درخت تک لے کر گیا تھا۔ آدم سو سال تو اپنی خطا پر شرمسار اشک ندامت بہاتے ہوئے ایک جگہ ہی بیٹھے رہے اور (شرم سے) اپنا سر آسمان کی طرف نہیں اٹھاتے تھے۔

پھر ایک دن اللہ تعالی نے حضرت جبرائیل کو آپ کی طرف بھیجا ، انہوں نے کہا: السلام علیک یا آدم! اللہ عز وجل تجھ پر سلامتی بھیجتا ہے اور تجھے فرماتا ہے: کیا میں نے تجھے اپنے دونوں ہاتھوں سے نہیں بنایا؟ کیا تجھ میں اپنی روح نہیں پھونکی؟ کیا میرے فرشتوں نے تجھے سجدہ نہیں کیا؟ کیا میں نے اپنی بندی حوا سے تیری شادی نہیں کروائی؟ پھر یہ رونا کیسا ہے؟ حضرت آدم بولے: اے جبرائیل ! میں کیسے نہ روؤں حالانکہ میں اپنے رب کے قرب سے نکالا گیا ہوں؟ حضرت جبرائیل نے کہا: اے آدم! ان کلمات کو پڑھ لیں، اللہ آپ کی غلطی معاف کر دے گا اور توبہ قبول کرے گا۔ حضرت آدم نے پوچھا : وہ کلمات کیا ہیں؟ فرمایا: اے اللہ! میں تجھ سے محمد اور آل محمد کے حق سے مانگتا ہوں، تو پاک ہے اور سب تعریف تیری ہے، بیشک نے میں نے برا کیا اور خود پرظلم کیا (مجھے بخش دے) کیونکہ صرف تو ہی خطاؤں کو بخشتا ہے، مجھ پر رحم کر تو بہترین رحم کرنے والا ہے۔ تو پاک ہے اور سب تعریف تجھے سزاوار ہے، تیرے سوا کوئی معبود نہیں، بیشک میں نے برا کیا اور خود پر ظلم کیا؛ مجھے بخش دے بیشک تو توبہ قبول کرنے والا اور رحم کرنے والا ہے۔ تو پاک ہے اور سب تعریف تیری ہی ہے، میں نے برا کیا او رخود پر ظلم کیا، مجھے معاف کر دے کیونکہ تو بہترین معاف کرنے والا ہے۔" وہ کلمات یہ تھے۔

Who are we

Spiritual force behind the Foundation's activities here in Pakistan. Our Shaykh in Qadari Tariqa

Syed Rafaqat Hussain Shah
Shaykh of Qadari Razzaqi tariqa
Ahmed

Shaykh of Tariqa al Akbariiya, our mentor in correct understanding of the Shaykh's teachings.

Shaykh Ahmed Muhammad Ali
Shaykh of Akbariyya Tariqa

Editor, Translator and Ambassador of Shaykh al Akbar. Working full time in the foundation

Abrar Ahmed Shahi
Head at Ibn al Arabi Foundation Pakistan

Proof reader and Urdu language editor, contributing part time on Foundation's activities

Hamesh Gul Malik
Secretary General.